اداروں سے وصولی کے لئے حیدرآباد کی عوام پر یزیدی ظلم ڈھایا جا رہا ہے:اراکین اسمبلی ایم کیو ایم

حیدرآباد: متحدہ قومی موومنٹ حیدرآباد کے اراکین قومی و صوبائی اسمبلی نے اپنے ایک مشترکہ بیان میںکہا ہے کہ اداروں سے وصولی کے لئے حیدرآباد کی عوام پر یزیدی ظلم ڈھایا جا رہا ہے اور حیدرآباد کی عوام کو پانی جیسی بنیادی سہولت سے محروم کردیاگیا ہے۔ متحدہ قومی موومنٹ حیدرآباد کے اراکین قومی و صوبائی اسمبلی نے اپنے ایک مشترکہ بیان میں حیسکواور محکمہ واسا کی سردجنگ کی بدولت عوامی مشکلات پر اظہار تشویش کرتے ہوئے کہاکہ حیدرآباد میں اعلانیہ و غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ نے عوامی مشکلات میں جہاں اضافہ کیا ہے وہاں اب عوام سے پانی جیسی بنیادی ضرورت سے بھی محروم کردیا ہے ۔انھوں نے کہاکہ محکمہ واساکی کارکردگی نے شہر کو مسائل سے دوچار کردیا ہے اور حیسکو محکمہ واسا سے بل کی ادائیگی کےلئے باربار انکی بجلی منقطع کردیتا ہے جو حیدرآباد کی عوام کے ساتھ زیادتی ہے ۔انھوں نے کہاکہ واسا بجلی کے بل کی ادائیگی صوبائی فنڈ نہ ملنے کی وجہ قرار دیتا ہے اور صوبائی حکومت وفاق کی جانب سے فنڈ نہ ملنے کو اس کاذمہ دار قرار دیتی ہے اس صورتحال کا حل جلد سے جلد نکالا جائے تاکہ حیدرآباد کی عوام پانی جیسی نعمت سے محروم نہ رہ سکے ۔انھوں نے کہاکہ وفاق کی جانب سے صوبائی فنڈکی عدم ادائیگی کی سزا حیدرآباد کی عوام کے دی جا رہی ہے جو سراسر ظلم و زیادتی کے مترادف ہے ۔انھوں نے کہاکہ محکمہ واسا کے کنکشن منقطع کئیے جانے سے حیدرآباد میدانِ کربلا کا منظر پیش کر رہا ہے۔انھوں نے ارباب اختیار سے اپیل کی کہ وہ محکمہ واسا اور حیسکو کی کارکردگی کو بہتر سے بہتر بنانے کے لیے فوری ایکشن لیں تاکہ حیدرآباد کے عوام پانی جیسی بنیادی سہولت سے محروم نہ رہیں۔