حیدر آباد میں پانی کے بحران کے خلاف انسان دوست تحریک کا احتجاج

حیدرآباد: انسان دوست تحریک کے چیئرمین محمدعارف قائم خانی ملک رمضان ،عبدالرحیم چندریگر،زبیرآرائیں،مقصود سنار ،نور الدین آرائیں ،آصف قائم خانی ،جنید جبارنے اپنے مشترکہ بیان میں پانی کے بحران پر شدید ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ حکومت سندھ ایچ ڈی اے اورواسانے حیدرآباد کو کربلا بنا دیا ہے شہری پینے کے پانی کی بوند بوند کو ترس رہے ہیں مگر افسوس کے وزراء،مشیران اور افسران کے کانوں پر جوں تک نہیں رینگ رہی ہے۔ نماز جمعہ کے لیے مساجد میں وضو کے لیے بھی پانی نہیں،انھوں نے کہا کہ کرپٹ افسران نے واسا اورایچ ڈی اے کو ڈیمک کی طرح چاٹ لیاہے جس کی وجہ سے آج ادارہ عوام کو بنیادی سہولت فراہم کرنے سے بھی قاصر ہے، انھوں نے کہا کہ کروڑوں روپے کی لاگت سے تعمیر ہونے والے فلٹر پلانٹ عوام کا منہ چڑا رہے ہیں شدید گرمی کے باوجود شہر میں جگہ جگہ لگائے جانے والے فلٹر مشین زبو حالی کا شکار ہیں ان کی مینٹشن پر کوئی توجہ نہیں بجلی کی لوڈ شیڈنگ سے عوام پہلے ہی پریشان تھے ،واسا نے بھی عوام کی زندگی اجیرن بنادی ہے ۔