ہتک عزت قانون کیخلاف دائر درخواست  قابل سماعت قرار

لاہور(پی پی آئی)لاہور ہائیکورٹ کے رجسٹرار آفس نے ہتک عزت کے قانون کے خلاف دائر درخواست پر عائد اعتراض ختم کر دیا۔ہتک عزت کے قانون کے خلاف درخواست ایڈووکیٹ ندیم سرور کی وساطت سے دائر کی گئی جس میں وزیر اعلی اور گورنر پنجاب کو بذریعہ پرنسپل سیکرٹر ی  اور پنجاب حکومت فریق بنایا گیا ہے۔قبل ازیں رجسٹرار آفس کی جانب سے قانون سے متعلق نوٹیفکیشن کی کاپی لف نہ کرنے کا اعتراض کیا گیا تھا جسے درخواست گزار کی جانب سے دور کر دیا گیا۔رجسٹرار آفس نے ہتک عزت قانون کے خلاف درخواست پر اعتراض ختم کر کے قابل سماعت قرار دیدی۔درخواست گزار کی جانب سے موقف اختیار کیا گیا ہے کہ ہتک عزت قانون آئین اور قانون کے منافی ہے، ہتک عزت آرڈیننس اور ہتک عزت ایکٹ کی موجودگی میں نیا قانون نہیں بن سکتا۔درخواست میں مزید کہا گیا ہے کہ ہتک عزت قانون میں صحافیوں سے مشاورت نہیں کی گئی، ہتک عزت کا قانون جلد بازی میں صحافیوں اور میڈیا کو کنٹرول کرنے کے لیے لایا گیا ہے۔شہری کی جانب سے درخواست میں استدعا کی گئی ہے کہ عدالت ہتک عزت کے قانون کو کالعدم قرار دے اور درخواست کے حتمی فیصلے تک ہتک عزت قانون پر عملدرآمد روکا جائے۔

Latest from Blog