جیکب آباد میں رشتے کے تنازعے پر ماموں اوربھانجے کا قتل

جیکب آباد:جیکب آباد کے علاقے داﺅجھان پور میں دیرینہ تنازعے پر ماموںبھانجاکو قتل کردیاگیا۔داﺅ جہان پور کے قریب تھانہ تاجو دیرو کی حدود چھٹل آباد میں تین نامعلوم موٹرسائیکل سوار مسلح افراد نے رشتے پر چلنے والے دیرینہ تنازعے پر داﺅ سے اپنے گھر تھارو خان کھوسہ جانے والے دو افراد ماموں55سالہ مٹھار علی عرف ٹھارو خان اور30سالہ بھانجا محمد ایوب کو قتل کر کے فرار ہوگئے، اطلاع پر حدود پولیس نے جائے وقوعہ پر پہنچ گئی اور نعشیں پوسٹ مارٹم کے بعد ورثا کے حوالے کر دیں ۔ پولیس کا کہنا تھا کہ کھوسہ قبائل کے دو گروپوں میں 2010سے رشتے کے تنازعے پر تصادم چل رہا ہے جس پر پہلے بھی مقتول منٹھار علی کھوسہ کے بیٹے کو قتل کیا گیا تھا اور کل منٹھار کو بھانجے ایوب کے ہمراہ قتل کر دیا گیا مزید تفتیش بھی جاری ہے۔

حیدرآباد میں فائرنگ سے وکیل اوران کاگارڑ جاں بحق

حیدرآباد(پی پی آئی)حیدرآباد میںٹارگٹ کلنگ کے نتیجے میں وکیل اور ان کا گارڑ جاں بحق ہوگئے۔حیدرآباد میں ہٹڑی تھانہ کی حدود نیو حیدرآباد سٹی میں نامعلوم مسلح کار سواروں نے 50سالہ احسان آرائیں ایڈوکیٹ ولد عمر آرائیں اور ان کے گارڈ 45سالہ صوبو خان ولد کبیر خان کو گولیاں ماردیں جس سے موقع پر جاں بحق ہوگئے۔احسان آرائیں ٹنڈو جام سے مٹیاری جارہے تھے جو ں ہی حیدرآباد سٹی کی حدود میں داخل ہو ئے ان کے تعاقب میں آنے والی کار نے گولیاں برسا دیں دو گولیاں احسان آرائیں ایڈووکیٹ کو لگیں اور چار گولیاں ان کے گارڈ کو لگیں دونوں موقع پر ہی جاں بحق ہو گئے بعد ازاں پولیس نے ایدھی رضا کاروں کے ذریعے سول اسپتال پہنچایا جہاں ان کے پوسٹ مارٹم کے بعد لاشیں ورثا ء کے حوالے کردی گئیں۔ ایس ایچ او ہٹڑی کا کہنا ہے کہ مذکورہ واقعہ زمین کے تنازعے اور ذاتی دشمنی سے تعلق رکھتا ہے تاہم مزید تفتیش کی جارہی ہے۔ واضح رہے کہ حیدرآباد میں سال نو 2015ء کو یہ پہلا خونی واقعہ ہے۔

تامل ناڈو کی وزیر اعلیٰ جے للیتا کرپشن کیس میں مجرم قرار

بنگلور:بنگلور کی عدالت نے تامل ناڈو کی وزیر اعلی جے للیتا کو اٹھارہ سال پرانے کرپشن کیس میں مجرم قرار دے دیا۔ وزیر اعلی جے للیتا پر 66 کروڑ روپے کی کرپشن کے الزامات ہیں جبکہ ان کے گھر سے کروڑوں روپے مالیت کے زیورات اور نقدی بھی ملی تھی۔ جے للیتا کے خلاف اٹھارہ سال پہلے کرپشن کے الزام کی تحقیقات شروع کی گئیں۔ انھیں غیر قانونی اثاثے رکھنے پر چھ ماہ سے چھ سال تک کی سزا ہو سکتی ہے۔ عدالتی فیصلے کے بعد کرناٹکا میں جے للیتا کی پارٹی کے کارکن مشتعل ہوگئے جبکہ انھیں وزارت اعلیٰ سے مستعفی بھی ہونا پڑ سکتا ہے۔

جوناتھ ڈائر کوبیوی پر تشدد کے الزام میںجیل بھج دیاگیا

نیویارک:امریکی فٹ بالر جوناتھن ڈائر کوبیوی پر تشدد کے الزام میں گرفتار کیا گیا۔جوناتھ ڈائر کو گھریلو تشدد کے الزام میں ریاست ایریزونا کے شہر فینکس سے گرفتار کیا گیا، پولیس کے مطابق جوناتھن پر 27 سالہ بیوی اور 18 ماہ کے بچے پر تشدد کا الزام ہے۔واقعہ جولائی کے آخر میں رپورٹ ہوا، جس کے بعد جوناتھن فرار ہوگیا تھا، اعتراف جرم کے بعد اسٹار فٹبالر کو جیل بھیج دیا گیا ہے۔

میرپور خاص میں جائے اڈے پر چھاپہ مالک سمیت متعدد ملزمان گرفتار

میرپورخاص: اے ایس پی کی جوئے کے اڈے سے22 ملزمان گرفتار کر لیے گئے۔میرپورخاص کے علاقے پٹھا ن کالونی میں عرصے دراز سے قائم گنگولی جوئے کے اڈے پر اے ایس پی میرپورخاص ساجد کھوکھر نے چھاپہ مار کرجوئے کے اڈے کے مالک عبدالمجید عرف گنگولی سمیت 22 افراد گرفتار کر کے جوئے کا سامان 3 عدد لیپ ٹاپ ،60 انچ کی کلر ایل سی ٹی ،1لاکھ 50 ہزار سے زائد رقم ، الیکٹرک جنریٹر ، 26 عدد جوئے کے رجسٹر ،فیکس مشینیں اور دیگر سامان برآمد کر لیا ،اے ایس پی میرپورخاص کا کہنا تھا کہ گنگولی کے نام سے چلنے والا یہ اڈا گزشتہ 20 سالوں سے قائم تھا ،جس کے خلاف کو کارروائی عمل میں نہیں لائی جارہی تھی ،جس کے باعث جرائم کی وارداتوں میں اضافہ ہو رہا تھا، انھوں نے کہا کہ اس اڈے کی خفیہ اطلاع پر معلوم ہوا کہ اڈے پر بڑے پیمانے پر پاکستان اور ویسٹ انڈیز کے میچ پر جوا کھیلا جا رہا ہے اور یہ جوا پورے پاکستان میں لیپ ٹاپ اور فیکس کے ذریعے کھیلا جارہا ہے،جس پر کارروائی کی گئی اور اڈے کا مالک عبدالمجید عرف گنگولی کوکارندوں کے ساتھ گرفتارکیاگیا ،تاہم آخری اطلا عات تک مقدمہ درج نہیں ہو سکا۔

ماشوخیل سے شدت پسندوں11افراد کو اغوا کر لیا

پشاور: پشاور میں60 سے زائد اغواکار تھانہ بڈھ بیر کی حدود ماشوخیل سے گیارہ افراد کو اغوا کرکے لے گئے۔ پشاور کے علاقے بڈھ بیر ماشوخیل سے شدت پسندوں نے گیارہ افراد کو اغوا کرلیا اغوا کار نامعلوم مقام کی طرف مغویوں کو لے کر فرار ہوگئے۔ ذرائع کے مطابق اغواءکاروں کی تعداد ساٹھ کے قریب تھی جو علی الصبح بڈھ بیر کے علاقے ماشو خیل میں ایک درجن سے زائد گاڑیوں میں اسلحہ سے لیس ہوکر داخل ہوئے اور گیارہ افراد کو اغوا کرلیا، مغویوں کا تعلق شنواری قبائل سے ہے۔ واقعے کے بعد پولیس نے علاقے کو گھیرے میں لے کرسرچ آپریشن شروع کردیا۔