مسلم لیگ ن قومی اسمبلی انتخابات میں تہتر نشستوں کے ساتھ سب سے بڑی جماعت بن کر ابھری ہے

اسالام آباد(پی پی آئی) مسلم لیگ ن قومی اسمبلی کے انتخابات میں تہتر نشستوں کے ساتھ سب سے بڑی جماعت بن کر ابھری ہے۔الیکشن کمیشن کی طرف سے 265 میں سے 256 نشستوں کے اعلان کردہ غیر سرکاری نتائج کے مطابق قومی اسمبلی میں پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز نے 54 اور متحدہ قومی موومنٹ پاکستان نے 17 نشستیں حاصل کیں۔پاکستان مسلم لیگ اور جمعیت علمائے اسلام پاکستان نے تین تین اوراستحکام پاکستان پارٹی نے دو نشستیں حاصل کیں۔مجلس وحدت المسلمین پاکستان، بلوچستان نیشنل پارٹی اور پاکستان مسلم لیگ (ضیاء) نے ایک، ایک نشست جبکہ آزاد امیدواروں نے 102 نشستیں جیتیں۔سندھ اسمبلی میں پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز 84 نشستوں کے ساتھ سب سے بڑی جماعت کے طور پر سامنے آئی ہے جس کے بعد ایم کیو ایم پاکستان 28، گرینڈ ڈیموکریٹک الائنس اور جماعت اسلامی نے دو دو نشستیں حاصل کیں۔ صوبائی اسمبلی کی 13 نشستوں پر آزاد امیدوار کامیاب ہوئے۔پنجاب اسمبلی میں پاکستان مسلم لیگ (ن) نے 137 نشستیں، پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹرینز نے 10، پاکستان مسلم لیگ نے 8، استحکام پاکستان پارٹی، پاکستان مسلم لیگ ضیاء اور تحریک لبیک پاکستان نے ایک ایک نشست حاصل کی جبکہ 137 نشستوں پر آزاد امیدوار کامیاب ہوئے۔خیبر پختونخوا اسمبلی کی کل 112 نشستوں پر 90 آزاد امیدوار کامیاب ہوئے۔ جمعیت علمائے اسلام پاکستان نے 7، پاکستان مسلم لیگ (ن) نے 5، پاکستان پیپلزپارٹی پارلیمنٹیرینز 4، جماعت اسلامی نے 3، پی ٹی آئی پارلیمنٹرینز نے 2 جبکہ عوامی نیشنل پارٹی نے ایک نشست پر کامیابی حاصل کی۔بلوچستان اسمبلی میں پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز 11 نشستوں کے ساتھ سب سے بڑی جماعت کے طور پر سامنے آئی ہے، پاکستان مسلم لیگ (ن) اور جمعیت علمائے اسلام پاکستان نے 9,9 نشستیں حاصل کی ہیں۔ بلوچستان عوامی پارٹی نے 4، نیشنل پارٹی نے 3 اور عوامی نیشنل پارٹی نے 2 نشستیں حاصل کی ہیں۔آزاد امیدواروں نے 6 نشستوں پر کامیابی حاصل کی۔ بلوچستان نیشنل پارٹی، بلوچستان نیشنل پارٹی (عوامی) اور حق دو تحریک بلوچستان نے ایک، ایک نشست حاصل کی۔

Latest from Blog