دیامر بھاشا ڈیم کی تعمیر تاخیر کا خدشہ،تعمیری کارکردگی 45 کی بجائے13 فیصد

دیامر (پی پی آئی) دیامر بھاشا ڈیم کی تعمیر میں تاخیر کا خدشہ ہے، ڈیم کی تعمیر اگست 2020 میں شروع ہوئی تھی۔دیامر بھاشا ڈیم کی تعمیر اگست 2020 میں شروع ہوئی تھی، شیڈول کے مطابق دیامر بھاشا ڈیم 2029 میں مکمل ہونا ہے، منصوبہ بندی کے مطابق اب تک ڈیم کی تعمیری کارکردگی 45 فیصد ہونا چاہیے تھی جو اندرونی اور بیرونی سرمایہ کاری میں مشکلات کے باعث چار برس میں تعمیری کارکردگی صرف 13 فیصد رہی ہے، ڈیم پر اب تک 129 ارب 99 کروڑ روپے خرچ ہو چکے ہیں، دیامر بھاشا ڈیم میں پاور ہاوس کی تعمیر کے لیے 1424 ارب روپے اور پانی کے ذخیرہ کے لیے 479 ارب روپے درکار ہیں۔پی پی آئی کے مطابق حکومت نے سعودی عرب کو بھی بھاشا ڈیم میں سرمایہ کاری کی دعوت دی ہے، دیامر بھاشا ڈیم تعمیر ہونے سے 4500 میگاواٹ بجلی پیدا ہوگی اور 64 لاکھ ایکڑ فٹ پانی ذخیرہ ہو سکے گا، دیامر بھاشا ڈیم کی تعمیر چین کی کمپنی پاور چائنہ کر رہی ہے۔

Latest from Blog