سانحہ گیارہ مئی کے گرفتار شدگان کو رہا کیا جائے،طاہر کھوکھر

مظفرآباد(پی پی آئی)ایم کیو ایم کے مرکزی رہنما  سینئر پارلیمینٹرین سابق وزیر سیاحت و ٹرانسپورٹ سابق پارلیمانی لیڈر اور چیئرمین ایکشن کمیٹی تحفظ مرکزی جامع مسجد محمد طاہر کھوکھر  نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے 11مئی سانحہ میں ناجائز طور پرملوث کیئے گئے تمام گرفتار شدگان کی رہائی کے لیئے 23جون کی ڈیڈ لائن دیتے ہوئے کہا کہ اگر میرپور کی نا اہل انتظامیہ نے اسیران کو غیر مشروط رہا نہ کیا تو وہ کئی اہم رازوں سے پردہ چاک کرتے ہوئے کئی اہم انکشافات کریں گے اور آئندہ کے لیئے احتجاجی پروگرام کاا علان کریں گے، پردے کے پیچھے کیا ہوتا رہا ہے اور کون کون کس کس سے رابطے میں رہا اور کون اپنی جان اور کرسی کو بچاتا رہا تاریں کہاں سے ہلائی جاتی رہیں اور کون حکم دیتا رہا کس کی ایماء پر گندہ کھیل کھیلا گیا سب کچھ بڑے پردے پر عوام کو دکھائیں گے۔ سابق وزیر محمد طاہر کھوکھر نے کہا کہ آج 80دن گزرنے کے باوجود کے ایف سی سانحہ کی اعلی سطحی وزارتی کمیٹی کی رپورٹ نہ جانے کہاں پھنسی ہوئی ہے جس باعث انتظامیہ میرپور کی نااہلی اور اہلیت سے عاری حکام ضلع کی سربراہی میں ضلع میرپور میں ریاست کے اندر ریاست قائم ہے اور من مرضی سے شہریوں کو مختلف مقدمات میں پھنسا کر مذموم مقاصد کی تکمیل کا سلسلہ تاہنوز جاری ہے انھوں نے کہا کہ وزیر اعظم آزاد کشمیر، چیف سیکرٹری  اور آئی جی  نے سانحہ کے ایف سی، اس کے بعد اب تک کے واقعات کی جوڈیشل انکوائری اور نا اہل انتطامیہ کو فوری تبدیل کر کے غیر جانبدار اور اہل سینئر لوگوں کو میرٹ پر تعینات نہ کیا تو 23جون کے بعد آئندہ کا شدید لائحہ عمل دیا جائے گا  اور پھر حالات کی تمام تر زمہ داری گڈ گورننس کا راگ الاپنے والی انوار سرکار پر عائد ہوگی۔

Latest from Blog